ٹوئٹر پر نفرت انگیز یپغامات کیلئے نیا فلٹر

معروف مائیکروبلاگنگ ویب سائٹ ٹوئٹر نے ناپسندیدہ پیغامات کے لیے اپنی پرائیوسی پالیسی کو مزید سخت کرتے ہوئے صارفین کے لیے نیا فلٹر متعارف کروا دیا ہے۔

اگست میں ٹوئٹر نے ڈائریکٹ میسج فیچر کی پرائیوسی کو مد نظر رکھتے ہوئے اس کے فلٹر کی آزمائش شروع کی تھی اور  واضح کیا تھا کہ موصول ہونے والے ناپسندیدہ پیغامات مذاق نہیں ہیں۔

ٹوئٹر کے مطابق انہوں نے "filter unwanted direct message” یعنی ناپسندیدہ پیغامات کے لیے فلٹر کی آزمائش مکمل کرلی ہے جو آئی او ایس، اینڈرائڈ اور ویب تینوں ورژن میں شامل کیا گیا ہے۔

خبررساں ادارے اےا یف پی کے مطابق اب صارفین کسی بھی ناپسندیدہ پیغام کو نظر انداز کر سکیں گے اور اس فلٹر کی مدد سے صارف کو معلوم ہوجائے گا کہ انہیں ڈائریکٹ میسج میں نازیبا، نفرت انگیز یا ایسا پیغام موصول تو نہیں ہوا جو ان کے لیے پریشانی کا باعث بن سکتا ہے۔

واضح رہے کہ اس سے قبل ٹوئٹر نفرت انگیز اور نازیبا تبصروں پر بھی پرائیوسی آپشن فراہم کر چکا ہے۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.